یہاں ہر شخص ہر پل

یہاں ہر شخص ہر پل حادثہ ہونے سے ڈرتا ہے

کھلونا ہے جو مٹی کا فنا ہونے سے ڈرتا ہے

میرے دل کے کسی کونے میں اک معصوم سا بچہ

بڑوں کی دیکھ کر دنیا بڑا ہونے سے ڈرتا ہے

عجب ہے زندگی کی قید میں دنیا کا ہر انساں

رہائ مانگتا ہے اور رہا ہونے سے ڈرتا ہے

Advertisements

2 thoughts on “یہاں ہر شخص ہر پل

  1. Kashif Great find!! What depth. I hope your parents, Bhabhi, Manahil and Muhammad Abdullah are all in great spirits.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s